ارشدشریف کے قتل میں کو ن لوگ ملوث ہو سکتے ہیں ، فیصل واوڈا کا حیران کن دعویٰ

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)سابق وفاقی وزیر فیصل واوڈا کا کہنا ہے کہ صحافی ارشدشریف کے قتل میں پاکستان تحریک انصاف سے تعلق رکھنے والے لوگ ملوث ہوسکتے ہیں۔نجی ٹی وی سماء کے پروگرام ندیم ملک لائیو میں گفتگو کرتے ہوئے فیصل واوڈا کا کہنا تھا کہ ارشد شریف کے قتل کی پلاننگ پاکستان میں ہوئی، ارشدشریف کے خون سے کھلواڑ کرنا تھا جو نہیں ہوا۔

فیصل واوڈا کا کہنا تھا کہ ارشدشریف سے قتل سے10 دن پہلے بات ہوئی تھی، ارشد شریف کے پاکستان آنے میں کوئی رکاوٹ نہیں تھی۔ جس فارم ہاؤس کی بات ہورہی وہ نیروبی سے بھی 2گھنٹے دور ہے، ارشد شریف کو قریب سے یا پھر گاڑی کے اندر سے مارا گیا۔صحافی ارشد شریف کے کینیا میں میزبان وقار سے متعلق فیصل واوڈا کا کہنا تھا کہ وقار میرے ساتھ پڑھ چکے ہیں جبکہ خرم اس کا چھوٹا بھائی ہے۔فیصل واوڈا کا کہنا تھا کہ پی ڈی ایم اور عمران خان کا مقابلہ نہیں کیا جاسکتا، نہ پی ڈی ایم میں جارہا تھااور نہ ہی جارہا ہوں، کوشش ہےکہ عمران خان کی سیاست کو بچالوں۔تحریک انصاف کے سابق رہنما کا کہنا تھا کہ بھیڑبکری نہیں ہوں جوضمیرکےمطابق ہوگا وہی کہوں گا، مجھے پارٹی سے نکالنے کا فائدہ2خاص اور3 سانپوں کو ہوا۔فیصل واوڈا کا کہنا تھا کہ عمران خان نےاسی فوج کےساتھ کام کرنا ہے، جولوگ عمران خان کو یہاں لیکر آئے،اس کا انہیں فائدہ نہیں ہونا، میرا یقین ہے کہ پی ٹی آئی کا یہ مارچ خونی ہے اور اس بات کی تصدیق خان صاحب نے بھی اب کردی ہے۔انہوں نے مزید کہا کہ زیادہ دیر نہیں رکوں گا،ابھی ذمہ داری سے چل رہا ہوں، عمران خان کو کہا ہے ان کے قریب سانپ بیٹھے ہوئے ہیں، پارٹی فنڈز پر نہیں جیتا،عمران خان کولوگوں کے نام بتاتا رہاہوں، اس بار جب بولوں گا تو ان دو خاص کا نام بھی لوں گا۔تحریک انصاف کے سابق رہنما کا جنرل الیکشن 2018 سے متعلق کہنا تھا کہ کوئی کہے کہ اس الیکشن میں اسٹیبلشمنٹ کا کردار نہیں تھا تو جھوٹ ہوگا۔



Source link
javedch.com

اپنا تبصرہ بھیجیں