پرائیویسی قوانین کی پابندی نہ کرنے پرمیٹا پر بھاری جرمانہ عائد

پرائیویسی قوانین کی پابندی نہ کرنے پر میٹا کو 62 ارب روپے سے زائد کا جرمانہ عائد کیا ہے۔

عالمی میڈیا رپورٹس کے مطابق آئرلینڈ کے ڈیٹا پروٹیکشن کمیشن (ڈی پی سی) نے میٹا پر 62 ارب روپے سے زائد کا جرمانہ عائد کیا۔

ڈی پی سی کی جانب سے جاری بیان میں بتایا کہ ڈیڑھ سال کی تحقیقات کے بعد میٹا پر جرمانہ عائد کیا گیا۔

ڈی پی سی کی جانب سے یہ تحقیقات اس وقت شروع کی گئی جب یہ انکشاف ہوا کہ فیس بک کے متعدد صارفین کا ذاتی ڈیٹا انٹرنیٹ پر دستیاب ہے۔

کمیشن نے فیس بک سرچ، فیس بک میسنجر، کانٹیکٹ امپورٹر اور انسٹاگرام کانٹیکٹ امپورٹر ٹولز کی جانچ پڑتال کے بعد دریافت کیا کہ میٹا کی جانب سے صارفین کے ڈیٹا کے تحفظ کے لیے قانونی ذمہ داری پوری نہیں کی جارہی۔

کمیشن کے مطابق میٹا یورپین جنرل ڈیٹا پروٹیکشن ریگولیشن (جی ڈی پی آر) پر عملدرآمد کرنے میں ناکام رہی جس کا اطلاق 2018 میں ہوا تھا۔

 


subscribe YT Channel

install suchtv android app on google app store

Source link
www.suchtv.pk

اپنا تبصرہ بھیجیں